News4

اتراکھنڈ:مسجد اور مدرسہ کے انہدام پر تشدد میں 5 ہلاک

ہلدوانی (اتراکھنڈ) اتراکھنڈ کے ہلدوانی میں جمعرات کو مسجد اور مدرسہ پر انتظامیہ کی جانب سے بلڈوزر چلادیئے جانے کے بعد پیدا کشیدگی آج جمعہ کو مزید بڑھ گئی ۔ مسلمانوں کے احتجاج اور ان کو روکنے کیلئے فورسیس کی کارروائی کے نتیجہ میں5 افر اد ہلاک ہوگئے اور 14 دیگر کو شدید زخم آئے ۔ ان کی حالت نازک بتائی گئی ہے ۔ اس ضلع میں انتظامیہ نے تجاوزات کے خلاف کارروائی بتاتے ہوئے گزشتہ روز مدرسہ اور مسجد کو منہدم کردیا ۔ اس کے ساتھ ہی حالات بگڑگئے ۔ بڑے پیمانے پر احتجاج شروع ہوئے جسے دیکھتے ہوئے ضلع مجسٹریٹ نے کرفیو نافذ کردیا اور اشرار کو دیکھتے ہی گولی مارنے کا حکم جاری کیا ۔ آج جمعہ کے موقع پر مسلمانوں کی جانب سے احتجاج میں شدید پیدا ہوئی اور احتجاج کئی جگہ پرتشدد ہوگیا ۔ فورسیس نے طاقت کا استعمال کیا اور فائرنگ بھی کی گئی۔ انتظامیہ نے انٹرنیٹ سرویس معطل کردی ہے اور سارے متاثرہ علاقوں میں اسکولوں کو تاحکم ثانی بند رکھنے کا حکم دیا گیا ہے ۔ اس دوران چیف منسٹر پشکر سنگھ دھامی نے متاثرہ ہلدوانی کا دورہ کیا اور حالات پر قابو پانے کی کوشش کی ۔ احتجاج کے مقامات پر گاڑیوں اور دیگر املاک کو نذر آتش کیا گیا ۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *