News4

غزہ پر اسرائیلی فوج کے حملے میں مزید 114 فلسطینی جاں بحق

تل ابیب: اسرائیلی فوج نے دیر البلاح میں گھر پر بمباری کی جس سے بچوں سمیت 16 فلسطینی جاں بحق ہوگئے۔ 24 گھنٹوں کے دوران مزید 114فلسطینی جاں بحق اور 250زخمی ہوگئے ، جس سے شہدا کی مجموی تعداد 26,751 ہوگئی۔ ہاسپٹلوں کے اطراف بھی حملے کیے گئے ، صیہونی فوج نے کئی روز سے العمل ہاسپٹل کا مکمل گھیراؤ کر رکھا ہے جہاں ڈاکٹر اور مریضوں کو زبردستی ہاسپٹل سے بیدخل کیا جانے لگا۔عالمی ادارہ صحت نے ایک بیان میں واضح کیا کہ ان کی ٹیم کو اسرائیلی رکاوٹوں کے باعث غزہ پہنچنے سے روکا جارہا ہے۔ اسرائیلی فورسز کی غزہ کے ساتھ ساتھ مقبوضہ مغربی کنارے میں بھی جارحیت جاری ہے ، اسرائیلی فوجی ابن سینا ہاسپٹل میں ڈاکٹر، نرس اور عام شہریوں کے لباس میں داخل ہوئے اور 3فلسطینیوں کو شہید کردیا۔

واضح رہے کہ 7 اکتوبر کو حماس کے مزاحمت کاروں نے جنوبی اسرائیل میں داخل ہو کر 1,200 افراد کو ہلاک کر دیا اور 250 کے قریب یرغمالیوں کو اپنے ساتھ غزہ لے گئے ۔ نومبر میں ایک ہفتے تک جاری رہنے والی جنگ بندی کے دوران 100 سے زائد یرغمالیوں کا فلسطینی قیدیوں سے تبادلہ کیا گیا۔غزہ پر اسرائیل کی جوابی کارروائی نے 2.3 ملین آبادی میں سے بیشتر کو بے گھر کر دیا ہے ۔ اقوامِ متحدہ کے مانیٹر کے مطابق فوج نے اپنی کارروائیوں کے دوران 161 مساجد کو نقصان پہنچایا ہے ۔ ایجنسی نے کہا کہ اس نے تباہ شدہ قبرستانوں کی تعداد کا پتہ نہیں لگایا ہے ۔جنوبی غزہ میں ایک اسلامی قبرستان مسمار کر کے قبروں کو زمین سے اکھاڑ دیا گیا۔ دانتوں کے بغیر ایک کھوپڑی ریتلے ، الٹ پلٹ ہوئے ملبے کے اوپر رکھی ہوئی تھی۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *