News4

کانگریس و بی آر ایس میں ’آبی جنگ‘:ایک طرف جلسہ تو دوسری طرف دورہ کالیشورم

دو ماہ بعد کے سی آر کا عوام سے پہلا خطاب ، ریونت ریڈی ارکان اسمبلی کو ناقص تعمیرات سے واقف کرائیں گے
حیدرآباد 12فروری (سیاست نیوز) تلنگانہ میں اقتدار کی تبدیلی کے دو ماہ بعد برسر اقتدار کانگریس اور اپوزیشن بی آر ایس کل 13 فروری کو طاقت کا مظاہرہ کریں گے ۔ دریائے کرشنا کے پانی کے مسئلہ پر حکومت اور اپوزیشن میں چھڑی آبی جنگ کل عروج پر رہے گی۔ بی آر ایس نے نلگنڈہ میں جلسہ عام کی تیاری کی ہے جس سے سابق چیف منسٹر کے چندر شیکھر راؤ خطاب کریں گے۔ جلسہ عام کا مقصد کانگریس حکومت کی جانب سے تلنگانہ کے آبی مفادات کو نظر انداز کرنے کے معاملہ کو عوام میں پیش کرنا ہے۔ بی آر ایس کے جلسہ کے جواب میں حکومت نے کل 13 فروری کو وزراء اور ارکان اسمبلی کے دورہ کالیشورم اور میڈی گڈہ کا اہتمام کیا ہے۔ دونوں پارٹیاں اسمبلی الیکشن کے بعد پہلی مرتبہ اپنی طاقت کا مظاہرہ کر رہی ہیں۔ لوک سبھا انتخابات سے قبل دونوں پارٹیوں کی سرگرمیاں اہمیت کی حامل ہیں۔ ڈسمبر میں کانگریس حکومت کی تشکیل کے بعد سے کے سی آر پہلی مرتبہ عوامی جلسہ عام سے خطاب کریں گے۔ کولہے کے آپریشن کے باوجود کے سی آر جلسہ عام میں شریک ہوں گے جس میں دو لاکھ افراد کی شرکت متوقع ہے۔ اپوزیشن کا جواب دینے کیلئے حکومت نے ارکان اسمبلی اور ارکان کونسل کے ساتھ میڈی گڈہ بیاریج دورہ کا پروگرام بنایا ہے تاکہ ناقص تعمیرات سے عوامی نمائندوں کو واقف کرایا جائے ۔ واضح رہے کہ سری سیلم اور ناگرجنا ساگر پراجکٹس سے آندھراپردیش کو زائد پانی کی سربراہی کا دونوں پارٹیاں ایک دوسرے پر الزام عائد کر رہی ہیں۔ چیف منسٹر ریونت ریڈی، ارکان اسمبلی و کونسل کے علاوہ وزراء کے ساتھ قانون ساز اسمبلی سے خصوصی بسوں کے ذریعہ میڈی گڈہ روانہ ہوں گے۔ اپوزیشن کے ارکان اسمبلی اور کونسل کو بھی مدعو کیا گیا ہے۔ اسمبلی کا اجلاس بح 10 بجے شروع ہوگا اور 10.15 بجے ملتوی کردیا گیا جائے گا جس کے بعد چیف منسٹر اور عوامی نمائندہ میڈیا گڈہ کیلئے روانہ ہوں گے۔ سہ پہر 3 بجے کالیشورم پراجکٹ کا معائنہ کرنے کے بعد دو گھنٹے تک تفصیلی جائیزہ لیں گے اور پاور پوائنٹ پریزینٹیشن حکومت کی جانب سے پیش کیا جائے گا ۔ شام 5 بجے چیف منسٹر اور عوامی نمائندے حیدرآباد کیلئے روانہ ہوں گے۔ حکومت نے قائد اپوزیشن کے سی آر کو بھی دورہ کی دعوت دی ہے۔ اسمبلی انتخابات میں شکست کے بعد بی آر ایس نے عوام سے رجوع ہونے کیلئے پانی کے مسئلہ پر ناانصافی کا انتخاب کیا ہے ۔ نلگنڈہ ، بھونگیر ، ورنگل اور سوریا پیٹ سے تقریباً 2 لاکھ افراد کی جلسہ عام میں شرکت کو یقینی بنانے کیلئے بی آر ایس قائدین متحرک ہیں۔ 1

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *